Zeeshan Mharvi

Zeeshan Mharvi

  • Latest
  • Video

""

"غزل مرا عشق ان پہ ظاہر کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا مری سوچ کا وہ محور کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا یہ غضب کی پارسائی یہ کمالِ آشنائی کوئی تم سا جگ کے اندر کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا مجھے آسرا دیا ہے مجھے کیا بنا دیا ہے کوئی تم سا بندہ پرور کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا مرے دوستوں سے میرا کوئی واسطہ نہیں ہے سنو کوئی میرا یاور کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا یہی میرا مدعا ہے یہی میرا فیصلہ ہے کوئی آپ کے برابر کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا کھلا مجھ پہ رنگ ہستی جو پیا وہ بادہ مستی کوئی اس سا جام و ساغر کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا رہیں غیر سے وفائیں رہی ہم سے ہی جفائیں کوئی آپ سا ستمگر کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا تری چشمِ پُر فتن سے گئیں لاکھ جانیں لیکن مرے دل کے پار خنجر کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا یہ سحر بیانی ذیشاںؔ نہیں اس قدر بھی آساں تو کمال کا سخنور کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا ذیشانؔ مہروی"

غزل

مرا عشق ان پہ ظاہر کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا
مری سوچ کا وہ محور کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا

یہ غضب کی پارسائی یہ کمالِ آشنائی
کوئی تم سا جگ کے اندر کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا

مجھے آسرا دیا ہے مجھے کیا بنا دیا ہے
کوئی تم سا بندہ پرور کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا

مرے دوستوں سے میرا کوئی واسطہ نہیں ہے
سنو کوئی میرا یاور کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا

 یہی میرا مدعا ہے یہی میرا فیصلہ ہے
کوئی آپ کے برابر کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا

کھلا مجھ پہ رنگ ہستی  جو پیا وہ بادہ مستی
کوئی اس سا جام و ساغر کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا

رہیں غیر سے وفائیں رہی ہم سے ہی جفائیں 
کوئی آپ سا ستمگر کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا

تری چشمِ پُر فتن سے گئیں لاکھ جانیں لیکن
مرے دل کے پار خنجر کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا

یہ سحر بیانی ذیشاںؔ نہیں اس قدر بھی آساں
تو کمال کا سخنور کبھی تھا نہ ہے نہ ہو گا

ذیشانؔ مہروی

 

8 Love

""

"BHOT ZEESHAN DHUK JHALY HAIN MA NY MUJHY LGTA HA AB MA MR GIA HON ZEESHAN MHARVI"

BHOT ZEESHAN DHUK JHALY HAIN MA NY
MUJHY LGTA HA AB MA MR GIA HON
ZEESHAN MHARVI

 

7 Love

 

6 Love
24 Views

 

7 Love
15 Views

 

7 Love
27 Views